افغانستان کے شہر ہرات میں قائم ایرانی اسکول کوثر رضوی کا ہرات کے شہریوں اور اسکولی بچوں کی جانب سے غیر معمولی سطح پر خیرمقدم کیا جا رہا ہے-

ہرات میں ایرانی اسکول کوثر رضوی کے پرنسپل محمد ناصر انصاری نے ارنا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس اسکول میں افغانستان کے ہی درسی نصاب کی تعلیم دی جاتی ہے لیکن اس کا انتظام اور تعلیمی روش ایران کی تعلیمی روش کی بنیاد پر ہے اور اس اسکول کے اب تک بہت ہی بہتر نتائج برآمد ہوئے ہیں۔

 ان کا کہنا تھا کہ اس اسکول سے پاس ہونے والے بچے افغانستان کی یونیورسٹیوں کے داخلہ امتحانات میں بڑی تعداد میں پاس ہوئے ہیں-

ہرات میں ایرانی اسکول کوثر رضوی کے پرنسپل محمد ناصر انصاری نے بتایا کہ یہ اسکول ہرات میں افغان بچوں کی بہتر تعلیم کے لئے کھولا گیا ہے اور اس وقت اس اسکول میں تین سو اسّی طالبات اور دو سو پچاس طالب علم زیرتعلیم ہیں-

ان کا کہنا تھا کہ اسکول میں بچوں کی تعداد میں گذشتہ برس کے مقابلے میں دس فیصد اضافہ ہوا ہے- کوثر رضوی اسکول کے پرنسپل کا کہنا ہے کہ یہ اسکول معیار تعلیم کے لحاظ سے ہرات کے اسکولوں میں ممتاز مقام رکھتا ہے اور اسکول میں بچوں کا داخلہ، داخلہ ٹیسٹ پاس کرلینے کے بعد ہی  لیا جاتا ہے-

 

Jan ۰۵, ۲۰۱۷ ۱۰:۲۳ UTC
کمنٹس