• چھے ملکی اسپیکر کانفرنس کا اختتامی بیان جاری

تہران میں جاری چھے ملکی اسپیکر کانفرنس ہفتے کی شام ایک بیان جاری کرکے ختم ہوگئی جس میں دہشت گردی کے خلاف جنگ میں علاقائی تعاون کی تقویت اور اقوام متحدہ کے کلیدی کردار کی ضرورت پر زور دیا گیا۔

ایران، پاکستان، افغانستان، ترکی، چین اور روس کے اسپیکروں کی دوسری سالانہ کانفرنس کے اختتامی بیان میں کہا گیا ہے کہ دہشت اور انتہا پسندی کی روک تھام کی غرض سے عالمی تعاون کو آسان بنانے میں اقوام متحدہ کو کلیدی کردار حاصل ہونا چاہیے۔
بیان میں افغانستان میں قیام امن اور خطے میں دہشت گردی، انتہا پسندی اور منشیات کی روک تھام کے لیے کی جانے والی ہر کوشش خیر مقدم کیا گیا ہے۔
چھے ملکی اسپیکرز کانفرنس کے اختتامی بیان میں کہا گیا ہے کہ جموں کشمیر کامعاملہ اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل اور پاکستان و ہندوستان کی جانب پر امن راہ حل کا متقاضی ہے۔
بیان میں آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور فلسطینیوں کے حقوق کی مکمل بالادستی اور انہیں حق خود ارادیت دینے جانے کی بھی بھرپور حمایت کی گئی ہے۔
قابل ذکر ہے کہ ایران،پاکستان، افغانستان، ترکی، چین اور روس کے اسپیکروں کی تیسری سالانہ کانفرنس سن دوہزار انیس میں ترکی میں ہوگی۔

ٹیگس

Dec ۰۸, ۲۰۱۸ ۲۱:۳۱ Asia/Tehran
کمنٹس