• عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کا اجلاس
    عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کا اجلاس

عرب لیگ کے وزرائے خارجہ نے ملت فلسطین کے خلاف صیہونی حکومت کی منظم دہشت گردی کی مذمت کی ہے۔

کویت کی سرکاری نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عرب لیگ کے وزرائے خارجہ نے پیر کو ریاض میں اپنے ہنگامی اجلاس میں ایک بیان جاری کرکے تاکید کی کہ اسرائیل منظم ٹارگٹ کلنگ ، فلسطینی زمینوں پر یہودی کالونیوں کی تعمیر اور مسلسل نسلی صفائے سمیت انسانیت کے خلاف جرائم کا ارتکاب کر کے حکومتی دہشت گردی کر رہا ہے-

عرب لیگ کے وزرائے خارجہ نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ اسرائیل کو ان غیر قانونی اقدامات کو روکنے کا پابند بنانے کے لئے فوری تدابیر اختیار کرے کہ جو علاقے کے امن و استحکام کے لئے خطرہ ہیں اور امن کے عمل کو ناکام بنا رہے ہیں-

متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ شیخ عبداللہ بن زاید آل نہیان نے جو عرب لیگ کے ہنگامی اجلاس کی صدارت کر رہے تھے، اس بات پر تاکید کرتے ہوئے کہ اسرائیل نے فلسطین میں جنگی جرائم کا ارتکاب کیا ہے اور کر رہا ہے ، عرب لیگ اور تمام دوست ممالک سے اپیل کی کہ وہ صیہونیوں کے اقدامات کو روکیں-

درایں اثنا مصر کے شہر شرم الشیخ میں ہونے والے عرب سربراہی اجلاس میں تشکیل پانے والی عرب وزراء کی کمیٹی کو معینہ مدت کے اندر اسرائیل کے غاصبانہ قبضے کا سلسلہ بند کرانے کی غرض سے سلامتی کونسل میں ایک قرار داد کی منظوری کے لئے کی جانے والی کوششوں کا جائزہ لینے کی ذمہ داری دی گئی- اس قرار داد کا مقصد جون انیس سو سڑسٹھ کی سرحدوں کے تناظر میں ایسی خود مختار فلسطینی مملکت کی تشکیل ہے جس کا دارالحکومت بیت المقدس ہو-

عرب وزارتی کمیٹی نے بیت المقدس کو مقبوضہ فلسطین میں شامل کرنے، عرب تشخص کو نقصان پہنچانے اور آبادی کے تانے بانے کو تبدیل کرنے کے مقصد سے غاصب صیہونی حکومت کی تمام پالیسیوں اور غیر قانونی منصوبوں کی بھرپور مخالفت کا اعلان کیا- ریاض میں عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کا اجلاس متحدہ عرب امارات کی درخواست پر بلایا گیا تھا-

Nov ۱۰, ۲۰۱۵ ۰۴:۴۳ UTC
کمنٹس