• کوئٹہ دہشت گردوں کے نشانے پر

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کا شہر کوئٹہ ان دنوں دہشت گردوں کے نشانے پر ہے اور دہشت گردوں نے ایک اور کارروائی کرنے کی کوشش کی جسے ناکام بنا دیا گیا۔

کوئٹہ کی چمن ہاؤسنگ اسکیم کے قریب ایف سی مددگار سینٹر کے قریب یکے بعد دیگرے 3 دھماکے سنے گئے جس کے بعد فورسز اور دہشت گردوں میں بہت دیر تک فائرنگ کا تبادلہ جاری رہا جبکہ سیکیورٹی اہلکاروں نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا اور جوابی کارروائی میں پانچوں حملہ آوروں کو ہلاک کردیا۔

پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے کوئٹہ میں ایف سی ہیلپ سینٹر پر دہشت گرد حملے کی کوشش ناکام بنا دی، دھماکہ خیز مواد اور گولہ بارود سے لدی گاڑی نے ہیلپ سینٹر میں داخل ہونے کی کوشش کی، دہشت گردوں کی ناکام کوشش گزشتہ رات کلی الماس میں اہم دہشت گردوں کی ہلاکت کا ردعمل تھا تاہم چوکس ایف سی سپاہیوں نے دہشت گردوں پر فائر کھول دیا اور انھیں داخل نہیں ہونے دیا۔

ترجمان پاک فوج کا کہنا تھا کہ ایف سی اہلکاروں کی فائرنگ سے تمام دہشت گرد مارے گئے، ہلاک ہونے والے دہشت گرد بظاہر افغانی لگتے ہیں اور فائرنگ کے تبادلے میں 4 ایف سی اہلکار زخمی ہوئے لیکن اب صورتحال قابو میں ہے، سیکیورٹی فورسز علاقے کو کلیئر کر رہی ہیں۔

دوسری جانب وزیرداخلہ بلوچستان میر سرفراز بگٹی بھی ایف سی مددگارسینٹر پہنچے جبکہ ان کا کہنا تھا کہ حملے میں ملوث دہشت گردوں کو مار دیا گیا۔

واضح رہے کہ جمعرات کی رات کوئٹہ کے کلی الماس میں تکفیری گروہ لشکر جھنگوی کا سرغنہ اور کئی دیگر دہشت گرد ہلاک ہوئے تھے جبکہ اس کارروائی میں فوج کا کرنل بھی مارا گیا ۔

ٹیگس

May ۱۸, ۲۰۱۸ ۰۹:۴۰ Asia/Tehran
کمنٹس