• مشرف کے انتخابات میں حصہ لینے کا عدالتی فیصلہ واپس

سپریم کورٹ آف پاکستان نے سابق صدر پرویزمشرف کی عدم حاضری پر انتخابات میں کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا عبوری حکم واپس لے لیا ہے

چیف جسٹس  آف پاکستان کی سربراہی میں سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں کیس کی سماعت ہوئی - اس موقع پر مشرف کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ  پرویزمشرف واپس نہیں آرہے ہیں - وکیل کا کہنا تھا کہ وہ آنا چاہتے ہیں تاہم موجودہ حالات اور تعطیلات کی وجہ سے نہیں آرہے ہیں- اس سے پہلے پرویزمشرف کی جماعت آل پاکستان مسلم لیگ کے سکریٹری جنرل محمد امجد نے دعوی کیا تھاکہ پرویزمشرف جمعرات کو کسی بھی وقت پاکستان پہنچ سکتے ہیں - مشرف کے پاکستان نہ آنے کے فیصلے کے بعد سپریم کورٹ نے بھی مشرف کو عام انتخابات میں حصہ لینے کا عبوری حکم واپس لے لیا ہے - یاد رہے کہ سات جون کو سپریم کورٹ نے پاکستان کے سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کی تاحیات نااہلی کے خلاف درخواست کی سماعت کے دوران سابق صدرکو پاکستان واپس بلاتے ہوئے ان کے کاغذات نامزدگی بھی وصول کرنے کا حکم دیا تھا - چیف جسٹس نے کہا تھا کہ پرویزمشرف اگر کاغذات نامزدگی جمع کرانے پاکستان آئیں تو انہیں گرفتار نہیں کیا جائے گا - اس کے بعد سپریم کورٹ نے مشرف کو چودہ جون تک وطن واپسی کی مہلت دیتے ہوئے کہا تھا کہ اگروہ اس مہلت کے اندر نہ آئے تو قانون کے مطابق فیصلہ کیا جائے گا -

 

Jun ۱۴, ۲۰۱۸ ۱۸:۱۹ Asia/Tehran
کمنٹس