Aug ۲۴, ۲۰۱۸ ۱۵:۴۲ Asia/Tehran
  • اسرا الغمغام اور چار دیگر خواتین کی سزائے موت کا فیصلہ منسوخ کرنے کا مطالبہ

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے حکومت مخالف انسانی حقوق کی سعودی سماجی کارکن اسرالغمغام اور چار دیگر خواتین کی سزائے موت کا فیصلہ منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی مشرق وسطی کے امور کی ڈائریکٹر سماح حدید نے کہا ہے کہ سول سوسائٹی کے کارکنوں کی سزائے موت پر عملدرآمد  سعودی جیلوں میں بند انسانی حقوق کے دیگر کارکنوں کی زندگیوں کے لئے سنگیں خطرہ ہوگا - ایمنسٹی انٹرنیشنل کی ڈائریکٹر کا کہنا تھا کہ اسرا الغمغام کو سنائی جانے والی سزائے موت کا مقصد مشرقی سعودی عرب میں حکومت مخالفین کی آواز کو دبانا ہے۔ سعودی عرب میں تمام شہریوں کو مساوی حقوق دینے کا مطالبہ کرنے والی خاتون شیعہ رہنما اسرا الغمغام اور ان کے شوہر موسی الھاشم کو سن دوہزار پندرہ میں حکومت مخالف مظاہروں میں شرکت کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔سعودی پراسیکیوٹر نے اسرا الغمغام سمیت انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والی پانچ خواتین کو سزائے موت دینے کی سفارش کی ہے۔

ٹیگس

کمنٹس