• روس کا اسرائیل کو سخت انتباہ

اسرائیلی حملے کے دوران شام کی فضاؤں میں روسی طیارے کی تباہی کے بعد روس کے وزیر دفاع نے کہا ہے کہ ماسکو تل ابیب کے اس اقدام کا جواب دینے کا حق محفوظ رکھتا ہے۔

روسی وزیر دفاع سرگئی شویگوف نے منگل کے روز اسرائیل وزیر جنگ کو ٹیلی فون کر کے واضح کیا کہ ماسکو اسرائیل کو شام میں اپنے فوجی طیارے کی تباہی کا پورا پورا ذمہ دار سمجھتا ہے ۔
انہوں نے کہا کہ اسرائیل کے خلاف جوابی اقدام کا حق بھی روس کے لیے محفوظ ہے۔
روسی سینیٹ نے بھی اسرائیل کو آئندہ ایسے اقدامات کی بابت خبردار کرتے ہوئے شام کے دفاعی نظام کو مزید مضبوط بنانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔
ماسکو میں روس کی وزارت خارجہ نے اسرائیلی سفیر کو طلب کر کے اس واقعے پر شدید احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ ایسے واقعات کی تکرار کی صورت میں سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔
قابل ذکر ہے کہ شام کے ساحلی شہر لاذقیہ پر اسرائیل کے ہوائی حملے کے بعد روس کا ایک فوجی طیارہ عملے کے چودہ ارکان کے ساتھ گر کر تباہ ہو گیا۔
روسی وزارت دفاع نے بتایا ہے کہ اسرائیلی طیارے نے حملے کے دوران روسی طیارے کو اپنی شیلڈ کے طور پر استعمال کیا ہے جو انتہائی غیر ذمہ دارانہ ہے۔

ٹیگس

Sep ۱۸, ۲۰۱۸ ۱۸:۵۱ Asia/Tehran
کمنٹس