•  ایران جوہری ہتھیاروں کے درپے نہیں، امریکہ

ایران کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ امریکہ کے ممکنہ نئے وزیر خارجہ کی جانب سے یہ بیان دینا کہ ایران جوہری ہتھیاروں کے درپے نہیں ہے ایران پر پابندیاں عائد کرنے کا کوئی جواز باقی نہیں رہتا۔

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے دورہ نیو یارک کے موقع پر امریکی چینل 'سی بی ایس' کے پروگرام Face the Nation میں گفتگو کرتے ہوئے ایران کی پُرامن جوہری سرگرمیوں کے حوالے سے  مائیک پومپیو کے حالیہ اعتراف پرکہا کہ مائیک پومپیو نے یہ اعتراف کیا کہ ایران کی جوہری سرگرمیاں پُرامن ہیں لیکن اس کے باوجود امریکہ نے ایران پر پابندیاں عائد کردیں جبکہ ایران نے ہرگز جوہری بم بنانے کا ارادہ نہیں کیا.

محمد جواد ظریف نے کہا کہ امریکہ، ایران پرمزید پابندیاں عائد کرنے کا ارادہ رکھتا ہے اس لئے کہ ایران جوہری ہتھیاروں کی مخالفت کرتا ہے.

واضح رہے کہ مائیک پومپیو نے جمعرات کے روز 12 اپریل کو امریکی سینٹ کی خارجہ روابط کی کمیٹی کے اجلاس میں کہا تھا کہ ایران جوہری معاہدے سے قبل اور جوہری معاہدے کے بعد بھی جوہری ہتھیار بنانے کے درپے نہیں تھا۔

محمد جواد ظریف اقوام متحدہ کے زیر اہتمام بین الاقوامی پائیدار ترقی کانفرنس میں شرکت کے لئے نیو یارک کے دورے پر ہیں.ظریف نیو یارک میں 6 روز قیام کریں گے اور وہ اس موقع پراقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل سمیت مختلف ممالک کے ہم منصبوں کے ساتھ بھی اہم ملاقاتیں کریں گے.

Apr ۲۱, ۲۰۱۸ ۰۹:۴۵ Asia/Tehran
کمنٹس