Dec ۱۳, ۲۰۱۹ ۱۰:۱۸ Asia/Tehran
  • اسلامک یونیورسٹی میں جھڑپ، 1 ہلاک، 35 زخمی

جماعت اسلامی اور اسلامی جمعیت طلباء نے کل کے واقعہ کی مذمت کی ہے۔

پاکستان کے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں واقع اسلامک انٹرنیشنل یونیورسٹی میں طلبہ تنظیموں کے مابین ہونے والے تصادم میں مزید شدت آگئی ہے جس کی وجہ سے زخمیوں کی تعداد 35 ہوگئی ہے جب کہ ایک طالبعلم دوران علاج زخموں کی تاب نہ لا کر اپنی جان کی بازی ہار گیا ہے۔

اسلام آباد میں پمز اسپتال کے ترجمان کا کہنا ہے کہ دوران علاج جاں بحق ہونے والے طالبعلم طفیل رحمان کی نعش کا پوسٹ مارٹم کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ کل اسلامک انٹرنیشنل یونیورسٹی اسلام آباد میں اسلامی جمعیت طلبہ اور سرائیکی اسٹوڈنٹس کونسل کے درمیان ہونے والے مسلح تصادم کے نتیجے میں ایک طالبعلم ہلاک اور 35 زخمی ہو گئے تھے۔ تقریب کے مہمان خصوصی جماعت اسلامی کے رہنما لیاقت بلوچ تھے جنہیں اس واقعہ کے بعد بہ حفاظت وہاں سے نکال دیا گیا۔

ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کے مطابق امن و امان کی صورتحال برقرار رکھنے کے لیے فوری طور پر رینجرز کو طلب کرلیا گیا ہے جب کہ یونیورسٹی آج بروز جمعہ بند رہے گی۔

جماعت اسلامی اور اسلامی جمعیت طلباء نے کل کے واقعہ کی مذمت کی ہے۔

ٹیگس

کمنٹس