Jan ۱۲, ۲۰۱۹ ۱۹:۱۴ Asia/Tehran
  • ہندوستان: اترپردیش میں مل کر الیکشن لڑنے کا ایس پی، بی ایس پی کا اعلان

ہندوستان کی ریاست اتر پردیش میں دو اہم حریف جماعتوں ایس پی اور بی ایس پی نے آئندہ لوک سبھا انتخابات میں مل کر بی جے پی کا مقابلہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

اترپردیش میں تقریباً ڈھائی عشروں تک ایک دوسرے کے کٹر حریف رہنے والی سماج وادی پارٹی اور بہوجن سماج پارٹی نے مرکز میں حکمران بھارتیہ جنتا پارٹی کو شکست دینے کے لیے ہفتہ کو آئندہ لوک سبھا انتخابات ساتھ مل کر لڑنے کا اعلان کیا۔

دارالحکومت لکھنؤ کے ایک پانچ ستارہ ہوٹل میں منعقدہ پریس کانفرنس میں بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی اور ایس پی کے صدر اکھلیش یادو نے، بی جے پی حکومت کی پالیسیوں اور طریقہ کار کو ملک کے مفاد کے خلاف قرار دیتے ہوئے لوک سبھا انتخابات، ساتھ مل کر لڑنے کا اعلان کیا۔

معاہدے کے تحت اتر پردیش کی اسّی لوک سبھا سیٹوں میں ایس پی اور بی ایس پی اڑتیس اڑتیس سیٹوں پر انتخاب لڑیں گی جبکہ دو نشستیں اتحادیوں کے لیے چھوڑی گئی ہیں۔

دونوں ہی پارٹیاں کانگریس کے صدر راہل گاندھی کے پارلیمانی حلقہ امیٹھی اور متحدہ ترقی پسند اتحاد یو پی اے کی سربراہ سونیا گاندھی کے پارلیمانی حلقے رائے بریلی میں اپنے امیدوار نہیں اتاریں گی۔

کمنٹس