Jul ۲۳, ۲۰۱۹ ۱۱:۵۴ Asia/Tehran
  • ایک خوبصورت تصویر جسے نظر لگ گئی!

اس تصویر میں بلال دوراں آیت اللہ ابراہیم زکزکی اپنے چھے شہید فرزندوں کے ہمراہ دیکھے جا سکتے ہیں۔

نائیجیریا کی سفاک فوج نے دو الگ الگ موقعوں پر تحریک اسلامی کے رہنما، مرد مجاہد آیت اللہ زکزکی کے چھے فرزندوں کو گولیوں سے بھون ڈالا۔ایک واقعہ یوم قدس کی ریلیوں میں پیش آیا جبکہ دوسرا اربعین حسینی کے موقع پر رقم ہوا۔تازہ ترین رپورٹوں کے مطابق اس وقت ملکی فوج کی جیل میں قید خود آیت اللہ زکزکی کی حالت تشویش ناک ہے جس کے پیش نظر ان دنوں دنیا میں جا بجا انکی رہائی کے لئے مظاہرے ہو رہے ہیں۔

گزشتہ پیر کو نائیجیریا کے دارالحکومت ابوجا میں آیت اللہ ابراہیم زکزکی کی رہائی کا مطالبہ لے کر پر امن مظاہرہ کیا گیا جس پر پولیس نے فائرنگ کر کے کم از کم چھے مظاہرین کو شہید کر دیا۔

ملک کی عدالت عظمیٰ نے شیخ زکزکی کی رہائی کا حکم صادر کر دیا ہے مگر اس کے باوجود ملک کی فوج انہیں آزاد کرنے سے گریز کر رہی ہے۔

ٹیگس

کمنٹس