• پاکستان کے وزیر خارجہ کی سیاسی زندگی کا فیصلہ چند گھنٹوں بعد

پاکستان کی عدالت آج وزیر خارجہ خواجہ آصف کی نااہلی سے متعلق درخواست پر پہلے سے محفوظ شدہ فیصلہ سنائے گی۔

پاکستانی میڈیا کے مطابق تحریک انصاف کے رہنما عثمان ڈار کی جانب سے پاکستان کے وزیر خارجہ خواجہ آصف کی نااہلی سے متعلق درخواست پر فریقین کے دلائل سننے کے بعد اسلام آباد ہائی کورٹ نے 10 اپریل کو فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔

درخواست گزار نے موقف اپنایا تھا کہ وزیر خارجہ دبئی میں ایک پرائیویٹ کمپنی کے ملازم ہیں جہاں سے وہ ماہانہ تنخواہ بھی حاصل کرتے ہیں، غیر ملکی کمپنی میں ملازمت کرنے والا شخص کیسے وزیر خارجہ کے اہم منصب پر فائز رہ سکتا ہے جبکہ خواجہ آصف کے وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا تھا کہ خواجہ آصف پہلے دبئی میں بینک میں ملازمت کرتے تھے، وہ دبئی میں فل ٹائم نہیں بلکہ ایڈوائزر کے طور پر ملازمت کرتے تھے۔

آخری سماعت پر جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا تھا کہ کوئی شخص کسی اور ملک میں ملازمت کرتا ہے تو پاکستان میں کیسے وزارت چلا سکتا ہے؟ عدالت نے فریقین کے دلائل مکمل ہونے پرفیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔

واضح رہے کہ اس سے پہلے پاکستان کے وزیراعظم محمد نواز شریف بھی عدالت کی جانب سے نا اہل قرار دیئے جا چکے ہیں۔

Apr ۲۶, ۲۰۱۸ ۰۷:۳۸ Asia/Tehran
کمنٹس