May ۱۰, ۲۰۱۹ ۰۴:۵۵ Asia/Tehran
  • چوتها پاره​

اس پارے میں دو حصے ہیں:1 - بقیہ سورۂ آل عمران2 - ابتدائے سورۂ نساء

(پہلا حصہ)سورۂ آل عمران کے بقیہ حصے میں پانچ باتیں ہیں:​1 - خانہ کعبہ کے فضائل 2 ۔ باہمی جوڑ (اتحاد)3 - امر بالمعروف اور نہی عن المنکر4 -  تین غزوے5 - کامیابی کے چار اصول

1 - خانہ کعبہ کے فضائل:یہ سب سے پہلی عبادت گاہ ہے اور اس میں واضح نشانیاں ہیں جیسے: مقام ابراہیم۔ جو حرم میں داخل ہوجائے اسے امن حاصل ہوجاتا ہے۔

 2 ۔ باہمی جوڑ (اتحاد)اللہ تعالیٰ کی رسی کو مضبوطی سے تھامو؛ [جو قرآن کریم اور اهل بیت اطہار علیهم السلام ہیں.].

3 - امر بالمعروف اور نہی عن المنکر:یہ بہترین امت ہے کہ لوگوں کی نفع رسانی کے لیے نکالی گئی ہے، بھلائی کا حکم کرتی ہے، برائی سے روکتی ہے اور اللہ پر ایمان رکھتی ہے۔

4 تین غزوے:۱ -غزوۂ بدر2۔غزوۂ احد3۔غزوۂ حمراء الاسد

5 - کامیابی کے چار اصول:1-صبر 2- مصابرہ 3-مرابطہ 4- تقوی

مصابرہ ..ایک دوسرے کو کسی صبر کرنے کا کہنا ...مرابطہ :دشمن کے لیئےتیار رہنا؛ یا آپس کا تعلق بہتر بنانا؛ رابطہ رکھنا... 

(دوسرا حصہ) سورۂ نساء کا جو ابتدائی حصہ اس پارے میں ہے اس میں چار باتیں ہیں:​

1- یتیموں کا حق:(ان کو ان کا مال حوالے کردیا جائے۔)

2-تعدد ازواج :(ایک مرد بیک وقت چار نکاح کرسکتا ہے بشرط ادائیگئی حقوق.... )

3 - میراث :( اولاد ، ماں , باپ ، بیوی ، کلالہ کے حصے بیان ہوئے؛ اس قید کیساتھ کی پہلی وصیت ادا کردی جائے )

4 - محرم عورتیں:(مائیں ، بیٹیاں ، بہنیں ، پھوپھیاں ، خالائیں ، بھتیجیاں ، بھانجیاں ، رضاعی مائیں ، رضاعی بہنیں ، ساس ، سوتیلی بیٹیاں ، بہویں )

ٹیگس

کمنٹس