Feb ۱۸, ۲۰۱۸ ۰۸:۳۸ Asia/Tehran
  • نائیجیریا میں 3 خودکش حملے 90 ہلاک وزخمی

نائیجیریا کے ایک پرہجوم بازار میں یکے بعد دیگرے 3 خودکش حملوں میں 22 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق خودکش حملہ آوروں نے نائیجیریا کی ریاست بورنو کے شہر میدوگوری کے مقامی بازار میں مجمع کے اندر خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔ یکے بعد دیگرے تین خودکش حملوں سے علاقہ لرز اٹھا اور لوگ چیخ و پکار کرنے لگے، دھماکوں کے بعد مارکیٹ میں بھگدڑ مچ گئی اور لوگ جان بچانے کے لیے محفوظ ٹھکانوں کی تلاش میں لگ گئے۔

بورنو ریاست کے پولیس چیف نے میڈیا کو بتایا کہ یہ حملے بھیڑ والی مچھلی مارکیٹ میں ہوئے جو کہ میدوگوری کے نواح میں واقع ہے جس میں 22 افراد ہلاک اور 28 زخمی ہوگئے، طبی عملے کا کہنا ہے کہ زخمیوں کی تعداد 70 سے زائد ہے جن میں 22 افراد کی حالت تشویشناک ہے۔ سویلین جوائنٹ ٹاسک فورس کے حکام کے مطابق تینوں حملہ آور مرد تھے اور بلا شبہ یہ حملے بوکو حرام کی جانب سے کئے گئے۔

نائیجیریا میں فوج اور پولیس کی جانب سے 2009 میں شدت پسند دہشتگرد تنظیم بوکو حرام کے خلاف آپریشن شروع کیا گیا اور اس دوران اب تک 20 ہزار لوگ ہلاک اور 26 لاکھ افراد بے گھر ہو چکے ہیں۔

یہ خود کش حملے ایسے وقت میں ہوئے ہیں کہ جب شدت پسند تنظیم بوکو حرام کے سیکڑوں دہشتگردوں کو ٹرائل کے لیے سویلین کورٹ میں پیش کیا گیا ہے۔

ٹیگس

کمنٹس