Jun ۳۰, ۲۰۲۰ ۰۸:۲۷ Asia/Tehran
  • ایران نے کی پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر حملے کی مذمت

پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد میں تعینات ایران کے سفیر نے کل کراچی میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر ہونے والے دہشتگردانہ حملے کی مذمت کی۔

پاکستان میں اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر سید محمد علی حسینی نے کل کراچی میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر ہونے والے دہشتگردانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگردوں نے اپنی فرضی طاقت کا مظاہرہ کرنے کے لئے بے گناہ افراد کا خون بہایا۔

واضح رہے کہ کل صبح 4 دہشت گرد سفید رنگ کی ایک کار میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج کے احاطے میں داخل ہوئے، گاڑی سے نکلتے ہی انہوں نے فائرنگ شروع کردی۔ اس موقع پر عمارت کی سکیورٹی پر تعینات گارڈز اور قانون نافذ کرنے والے اہلکاروں نے انہیں روکنے کی کوشش کی جس پر دہشت گردوں نے فائرنگ کے ساتھ ساتھ دستی بم پھینکے، دہشت گرد ٹریڈنگ ہال میں داخل ہونے میں کامیاب ہوگئے، جہاں انہوں نے اندھا دھند فائرنگ کردی۔ فائرنگ کے تبادلے میں تمام چاروں دہشت گرد ہلاک جب کہ پولیس اہلکار سمیت 4 سکیورٹی گارڈ جاں بحق ہوگئے ۔

حملے کی ذمہ داری بی ایل اے نے قبول کی۔ حملہ آوروں  کی عمریں 22 سال سے 28 برس کے درمیان ہیں۔

دوسری جانب پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ 2 سے 3 مشتبہ افراد کو پولیس نے جائے وقوعہ سے گرفتار کیا ہے۔

ٹیگس

کمنٹس