Oct ۱۸, ۲۰۱۹ ۰۸:۵۲ Asia/Tehran
  • چہلم حضرت امام حسین(ع) کے موقع پر کراچی اور لاہور میں فوج تعینات کرنے کا فیصلہ

پاکستان میں چہلم حضرت امام حسین(ع) کے موقع پرکسی بھی ممکنہ دہشتگردی سے مؤثر انداز میں نمٹنے کیلئے سکیورٹی پلان تشکیل دیا گیا ہے۔

پاکستان میں سکیورٹی خدشات کے پیش نظرسندھ  اور پنجاب کی صوبائی حکومتوں نے وفاق سے چہلم حضرت امام حسین(ع) پر کراچی اور لاہورمیں فوج تعینات کرنے کی سفارش کی ہے۔

سندھ کےصوبائی محکمہ داخلہ نے وفاقی وزارت داخلہ کو خط لکھا ہے جس میں سفارش کی گئی ہے کہ کراچی سمیت سندھ بھر میں فوج ، رینجرز اور ایف سی تعینات کی جائے۔

در ایں اثنا پاکستان میں 20 اکتوبر کو چہلم حضرت امام حسین(ع) پر امن و امان کی صورتحال یقینی بنانے کے لئے کراچی،لاہور اور کوئٹہ سمیت کئی دیگر حساس اضلاع میں موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل رکھنے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر بھی پابندی ہوگی۔

چہلم حضرت امام حسین(ع)  کے دوران منعقد کی جانے والی مجالس اور جلوسوں کے ساتھ ساتھ حساس تنصیبات کی سیکیورٹی کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔

واضح رہے کہ پاکستان و ہندوستان میں اتوار 20 اکتوبرکو چہلم حضرت امام حسین(ع) ہے جبکہ ایران اور عراق سمیت دوسرے ممالک میں چہلم حضرت امام حسین(ع) ہفتہ 19 اکتوبرکو ہے۔

 

ٹیگس

کمنٹس