Nov ۱۱, ۲۰۱۹ ۰۷:۴۸ Asia/Tehran
  • سمندری طوفان بلبل سے 15 ہلاک 20 لاکھ افراد بے گھر

سمندری طوفان بلبل بنگلہ دیش اور ہندوستان کے ساحلوں سے ٹکرا گیا جس کے نتیجے میں مجموعی طور پر 15 افراد ہلاک متعدد زخمی اور20 لاکھ افراد گھر بار چھوڑ کر پناہ گاہوں میں رات گذرانے پر مجبور ہوئے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق 150 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والے سمندری طوفان سے کئی گھروں کی چھتیں اڑ گئیں، لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت کشتیاں ساحلی علاقوں سے باہر نکالیں اور محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہوئے۔ ایک اندازے کے مطابق 20 لاکھ افراد کو اپنا گھر بار چھوڑنا پڑا۔ 13 ساحلی اضلاع میں تین سو شیلٹر قائم کر دیئے گئے ہیں جو کہ ناکافی بتائے گئے ہیں، متاثر ہونے والے افراد میں زیادہ تر خواتین اور بچے شامل ہیں۔ طوفان نے ہندوستانی علاقوں میں بھی تباہی مچائی۔ دونوں ممالک کے ساحلی علاقوں میں تند و تیز ہواؤں کے جھونکوں کے ساتھ موسلا دھار بارشوں کا سلسلہ جاری ہے۔

مختلف واقعات میں بنگلادیش میں 8 افراد لقمہ اجل بن گئے جب کہ  ہندوستانی شہر کلکتہ میں 3 اور ریاست اوڈیشا میں 4 افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے۔ تیز ہواؤں اور بارشوں کے باعث ہزاروں مکانات تباہ ہوگئے، بنگلادیش سے 3 لاکھ اور ہندوستان میں سوا لاکھ افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کیا گیا ہے۔

دونوں ممالک نے متاثرہ جنوبی ساحلی علاقوں میں ایمرجنسی نافذ کردی ہے، ریسکیو اداروں نے امدادی کاموں کا آغاز کردیا ہے، محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ آج شام تک طوفان کی شدت میں کمی کا امکان ہے تاہم شہری بلاضرورت گھروں سے باہر نکلنے سے اجتناب برتیں اور میونسپل اداروں کی ہدایات پر پوری طرح عمل کریں۔

ٹیگس

کمنٹس